Top 20 Quotes From Humsafar New humsafar Quotes, Status, Photo, Video

‘Humsafar Quotes’: Embracing the Beauty of Love’s Journey Together.

*مجھے دیکھ کر جو اک نظر، میرے سارے درد سمجھ سکے*
*کوئی ایسا جو ہو ہمسفر، مجھے اس شخص کی تلاش ہے…����*

* mujhe dekh kar jo ik nazar, mere saaray dard samajh sakay *
* koi aisa jo ho hamsafar, mujhe is shakhs ki talaash hai. .. ���� *

تمہارے قرب کی لزّت ،
میرے دِل میں اُتر کر یوں ،
مجھے مدہوش کرتی ہے ،
کہ جیسے سرد اور میٹھی ،
ہوا کا دلنشیں جھونکا ،
جھلستی دھوپ میں گزرے۔۔۔

tumahray qurb ki lazzat ,
mere dil mein utar kar yun ,
mujhe madhosh karti hai ,
ke jaisay sard aur meethi ,
sun-hwa ka dillnashi jhaunka ,
jhulasti dhoop mein guzray. . .

وہ مسکرائے تو ہم اپنے ہوش گنوا بیٹھے ⁦❤️⁩⁦❤️⁩
ہم ہوش میں آنے کو تھے وہ پھر مسکرا بیٹھے ����

woh muskuraye to hum –apne hosh ganwaa baithy ⁦❤️⁩⁦❤️⁩
hum hosh mein anay ko thay woh phir muskura baithy ����

،ہاے آداب محبت کے تقاضے ساغر۔
بس زرا سے لب ،ہلے اور شکایات نے دم توڑ دیا۔

کتنا مشکل ہے محور سے نکلنا تیرے۔
تو میری روح میں اترا ہے تو محسوس ہوا۔

kitna mushkil hai mehwar se niklana tairay .
to meri rooh mein Itra hai to mehsoos sun-hwa .

مجھے بیٹی بھی اس لڑکی کی جیسی دینا
اے خدا مجھے چھوڑا تھا جس نے باپ کی دستار کی خاطر

mujhe beti bhi is larki ki jaisi dena
ae kkhuda mujhe chorra tha jis ne baap ki dastaar ki khatir

اپنے حصے کی خوشیاں جس کے نام کر ڈالوں….
کوئی تو ہو جو مجھے اس طرح کا پیارا ہو����

ہمیں عادت نہیں یوں ۔۔۔۔۔۔۔۔ہر کسی پہ فدا ہونے کی……….❤
تمھارا انداز ہی کچھ ایسا تھا کہ سنبھل نہیں پائے..������۔

hamein aadat nahi yun. .. .. .. . har kisi pay fida honay ki. .. .. .. .. . ?
tumahra andaaz hi kuch aisa tha ke sambhal nahi paye. . ����. .

اس کو دیکھ لیتی تھی تو بھوک مٹ جاتی تھی ۔
میری آنکھوں کا رزق تھا میرے یار کا چہرہ ����

is ko dekh layte thi to bhook mit jati thi .
meri aankhon ka rizaq tha mere yaar ka chehra ����

ان کو ﮈر تھا کہ ھم ان کو خواب میں چوم نہ لیں,,
گال پہ ھاتھ رکھ کہ سو گیا ظالم_ہونٹوں کو چھوڑ کر

تا عمر غلام رھیں گے صاحب ہے کوئی جو ملا دے ان سے

taa Umar ghulam rhin ge sahib hai koi jo mila day un se

سوچھا تیری سادگی پے لکھوں ایک غزل
مگر افسوس کے تیرے معیار کے الفاظ نہ مل سکے

میں نے اس سے کہا بول دو ساری دنیا کے سامنے
تم صرف میرے ہو اس نے میرے کان میں کہا
میں صرف تمہارا ہو میں نے کہا ساری دنیا کے سامنے کہو
اس نے کہا تم ھی میری دنیا ہو……������

mein ne is se kaha bol do saari duniya ke samnay
tum sirf mere ho is ne mere kaan mein kaha
mein sirf tumhara ho mein ne kaha saari duniya ke samnay kaho
is ne kaha tum hi meri duniya ho. .. .. . ������

ﺍﮔﺮ ﮨﻮ ﻣﯿﺮﯼ ﺣﯿﺎﺕ ﻣﯿﺮﮮ ﺍﺧﺘﯿﺎر ﻣﯿﮟ_
ﺻﺪﯾﺎﮞ ﮔﺰﺍﺭ ﺩﻭﮞ میں ﺗﯿﺮﮮ ﺍﻧﺘﻈﺎر میں_

کس حد تک جانا ہے یہ کون جانتا ہے۔
کس منزل کو اپنانا ہے یہ کون جانتا ہے۔
دوستی کے دو پل جی بھر کے جی لو ۔
کس روز بچھڑ جانا ہے یہ کون
جانتا ہے۔

آنکھیں تو کوئی چیز نہیں شہر وفا میں ❤ ��
تم آؤ تو ہم دل بھی سر راہ بچھا دیں��

ﻣﺴﺌﻠﮧ ﺳﺎﺭﺍ ` ﺍُﺱ ﺳﮑﻮﻥ ﮐﺎ ﮨﮯ❤
ﺟﻮ ﺗﻤﮩﯿﮟ ﺩﯾﮑﮭﻨﮯ ﺳﮯ ﻣِﻠﺘﺎ ﮨﮯ ❤

تو ملے یا نا ملے ے میرے مقدر کی بات ہے
سکون بہت ملتا ہے تجہے اپنا سوچ کر .

تازہ ہے اب بھی اس ملاقات کی خوشبو____❤
جذبات میں ڈوبی ہوئی لمحات کی خوشبو__❤
جس ہاتھ کو پل بھر کے لیے تھام لیا تھا____❤
مدت سے ہاتھ میں ہے اسی ہاتھ کی خوشبو_❤

سب عادتیں چھوڑ سکتا ہوں ہمارے لیے تمہارے سوا

Leave A Reply

Please enter your comment!
Please enter your name here